ویکسینیشن اور آپ کی ملازمت | Vaccination and your job

کووڈ19- ویکسین مفت اور رضاکارانہ ہے اور یہ نیوزی لینڈ میں 12 سال یا اس سے زائد عمر کے ہر شخص کے لئے دستیاب ہے۔ بکنگ کروانے کے لئے Book My Vaccine پر جائيں یا کووڈ ویکسینیشن ہیلتھ لائن کو کال کریں۔

اس وقت نیوزی لینڈ میں زیادہ تر کام ایسے افراد مکمل کر سکتے ہیں جنہیں ابھی تک ویکسین نہیں لگی ہے۔

یہ معلوم کریں کہ اس صورت میں کیا ہوگا جب آپ کی ملازمت کا کام کسی ایسے کارکن کے ذریعے انجام دینے کی ضرورت ہو جسے COVID-19 کی ویکسین لگی ہو۔

آپ کے آجر کے لئے آپ کی رازداری کا تحفظ کرنا ضروری ہے

آپ کا آجر آپ کی ویکسینیشن کی صورتحال کے بارے میں معلومات کسی کے ساتھ شیئر نہیں کرسکتا، ماسوائے جب اس کے پاس ایسا کرنے کے لئے آپ کی اجازت ہو یا پھر جب پرائیویسی ایکٹ کے تحت کوئی استثنا ہو۔

آپ کو اپنے آجر کو یہ بتانے کی ضرورت نہیں ہے کہ آیا آپ کو ویکسین لگی ہے یا نہیں۔ اگر آپ نے ویکسین نہ لگوانے کا فیصلہ کیا ہے تو آپ کو اسے اس کی وجہ بتانے کی ضرورت نہیں ہے۔

اگر آپ کوئی ایسا کام کر رہے ہیں جو صرف ایک ایسا کارکن ہی سرانجام دے سکتا ہے جسے ویکسین لگی ہو لیکن آپ ویکسین لگنے یا نہ لگنے کے بارے میں نہيں بتانا چاہتے تو آپ کا آجر آپ کے بارے میں یہ فرض کر سکتا ہے کہ آپ کو ویکسین نہيں لگی ہوئی، لیکن اسے آپ کو مطلع کرنا ہوگا کہ وہ ایسا کر رہا ہے۔

اگر آپ کا کام صرف ایسا کارکن ہی سرانجام دے سکتا ہے جسے ویکسین لگی ہو

اگر آپ کا آجر صحت اور حفاظت کے نکتۂ نظر سے یہ سمجھتا ہے کہ کوئی مخصوص کام صرف ویکسین لگے ہوئے کارکن ہی کر سکتے ہیں تو اسے پہلے COVID-19 سے واسطہ پڑنے کے خطرے کا جائزہ کروانا ہوگا۔ یہ جائزہ کارکنوں، یونینوں اور دیگر نمائندوں کے ساتھ مل کر کرنے کی ضرورت ہے۔

خطرے کے جائزے میں درج ذیل پر غور کرنے کی ضرورت ہوگی:

  • کام کرنے کے دوران کارکنوں کا COVID-19 سے واسطہ پڑنے کا امکان
  • اس کے ممکنہ نتائج - مثال کے طور پر معاشرے میں پھیلاؤ۔

WorkSafe کے پاس خطرے کے جائزوں کے بارے میں زیادہ تفصیلی رہنمائی موجود ہے۔

اس بات کا جائزہ لینا کہ آیا کوئی مخصوص کام ایک ویکسین لگے ہوئے کارکن کے ذریعے ہی انجام دینے کی ضرورت ہے (external link)

ملازمت کے موجودہ قانون کی ذمہ داریاں ابھی بھی لاگو ہوتی ہیں۔ اس میں یہ شامل ہیں:

  • معاہدے کے ذریعہ ملازمت کی شرائط و ضوابط میں تبدیلی کرنا
  • نیک نیتی سے مشاورت میں شامل ہونا
  • ویکسین لگوانے کی صورتحال کی بنیاد پر کارکنوں کے خلاف غیر قانونی تفریق سے گریز کرنا
  • ایسے اقدامات نہ کرنا جو ویکسین لگوانے کی صورتحال کی بنیاد پر کارکنوں کو بلاجواز ضرر پہنچا سکيں۔

بارڈر یا زیرانتظام تنہائی اور قرنطینہ (MIQ) کے ماحول میں کام کرنا جہاں زیادہ خطرہ ہے

اگرچہ ویکسین لگوانا لازمی نہیں ہے اور لوگ آزادانہ طور پر COVID-19 ویکسین لگوانے یا نہ لگوانے کا فیصلہ کر سکتے ہيں، تاہم یہ ضروری ہے کہ MIQ یا زیادہ خطرہ سے دوچار بارڈر کے ماحول میں تمام کام ایسے افراد سرانجام دیں جنہیں COVID-19 کی ویکسین لگ چکی ہو۔ اس میں بین الاقوامی ہوائی اڈوں، بندرگاہوں اور ہوائی جہازوں پر موجود سرکاری ملازمین شامل ہیں۔

اس میں کچھ استثنا کا اطلاق ہوتا ہے۔ مثال کے طور پر ایسے شخص کو، جسے ویکسین نہیں لگی ہوئی، اس صورت میں کہيں داخل ہونے اور کام سرانجام دینے کی اجازت دی جاسکتی ہے جب کسی ہنگامی صورتحال میں کسی شخص کی زندگی، صحت یا حفاظت کو برقرار رکھنے یا اس کے تحفظ کے لئے ایسا کرنا ضروری ہو؛ یا قانون اس کی اجازت دیتا ہو یا اس کا تقاضہ کرتا ہو۔

بارڈر پر زیادہ خطرے کے حامل ماحول میں کارکنوں کے لئے ویکسین لگوانے کے تقاضے

کسی تنازعے سے کیسے نمٹا جائے

اگر آپ اور آپ کا آجر اس بات پرمتفق نہیں ہے کہ آیا ایک مخصوص کام صرف ویکسین لگے ہوئے کارکن کے ذریعے ہی کرنا ضروری ہے تو آپ ابتدائی ریزولوشن سروس (تنازعات حل کروانے کی ابتدائی خدمت) سے رابطہ کر سکتے ہيں۔ یہ مسائل کو حل کرنے کی کوشش کے طور پر ایک مفت اور غیررسمی اقدام کی پیشکش کرتی ہے۔

ابتدائی ریزولوشن سروس (external link)

مزید معلومات

COVID-19 ویکسین لگوانا اور ملازمت - ایمپلائمنٹ نیوزی لینڈ (external link)